صَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ

صَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ تری شان ذکر کروں تو کیاتجھے حق نے ایسا بنا دیا!کہ ترے لیے سرِ دوسرانہ مثیل ہے نہ مثال ہیصَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ سرِ لامکاں جو فراز تھاترے پائوں نے اُسے چُھو لیانہ گزر جہاں مرے وہم کاجسے پا سکے نہ خیال ہیصَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ سرِ حشر اک ترا آسرانہ مری فغاں میں دمِ رسانہ کمال و فیض لبِ دعانہ مرے عمل کا مآل ہیصَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ کبھی آئی کوئی کٹھن گھڑیترے دیں کو جب بھی طلب ہوئیسرِ نوکِ نیزہ گواہی دیتری آلؑ ہے تری آلؑ ہیصَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہ کلام- ثاقب اکبر Continue reading صَلُّوْا عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ

ابن عربی کی تعلیمات ۔ بعض اوقات شیطان کلمہ حق بلند کرتا ہے

ابن عربی کی تعلیمات ۔ بعض اوقات شیطان کلمہ حق بلند کرتا ہے لیکن مقصد اس کا باطل ہوتا ہے اور اس طرح وہ نفوس میں مداخلت کی راہ تلاش کرتا ہے ۔ مثال کے طور پر خوارج بالعموم توحید کے خوش کن نعرے کی آڑ میں اپنے تکفیری اور باطل نظریات کا پرچار کرتے ہیں ۔ جنگ صفین میں جن خوارج نے فیصلہ کن موقع پر کلام اللہ کی آڑ لے کر مولا علی کا ساتھ چھوڑا، انہوں نے بھی کلمہ حق بلند کیا تھا لیکن ان کا مقصد باطل کی اعانت کرنا تھا Continue reading ابن عربی کی تعلیمات ۔ بعض اوقات شیطان کلمہ حق بلند کرتا ہے

کیا ایرانی یا فارسی النسل لوگ اسلام سے نسلی تعصب رکھتے ہیں؟

بعض متعصب فرقہ پرست خوارج کہتے ہیں کہ ایرانیوں کو اوائل اسلام میں عربوں کی ایران پرفتح کے دن سے آج تک اسلام سے بغض ہے ۔ ان کے لیے عرض ہے کہ اہلسنت کے تقریباً تمام اکابر محدثین بشمول امام بخاری، امام مسلم، ابن ماجہ،نسائی، ترمذی، ابو داؤد اور دیگر ایرانی یا فارسی تھے ۔ آج کے تکفیری خوارج صرف فرقہ پرستی کی وجہ سے ایرانی یا فارسی بولنے والے اہل اسلام کو مجوسی سازشی اور مشرک کہتے ہیں ۔ ترکی میں عثمانیوں اور ایران میں صفیوں کی حکومت کے ادوار میں ذاتی یا خاندانی آمریت کے فروغ کے … Continue reading کیا ایرانی یا فارسی النسل لوگ اسلام سے نسلی تعصب رکھتے ہیں؟

حضرت عمر ابن عبد العزیز کے مزار کی بے حرمتی

مزارات مقدس کے دشمن۔ چند ماہ قبل شام کے شہر ادلب کے قریب معرہ النعمان کے قصبے کو شامی فوج نے داعش اور النصرہ کے خوارج کے قبضےسے واگزار کروایا۔ جنوری ۲۰۲۰ کی تصاویر سے ظاہر ہوتا ہے کہ خوارج نے اس قصبے میں کتنا نقصان پہنچایا ۔ خاص طور پروہاں پر حضرت عمر ابن عبد العزیز کی قبر اقدس کو نقصان پہنچایا گیا اس قبیح واقعے کے پانچ ماہ بعد عالمی استعماری طاقتوں کے آلہ کار تکفیری خوارج اس واقعے کو فرقہ وارانہ رنگ دینے کی کوشش کر رہے ہیں تاکہ امت مسلمہ کو اندر سے کمزور کیاجا سکے … Continue reading حضرت عمر ابن عبد العزیز کے مزار کی بے حرمتی

تمام فرقے ایک دوسرے کی احادیث کی کتب سے استفادہ کریں

اتحاد بین المسلمین کا ایک راستہ یہ بھی ہے کہ سنی اور شیعہ ایک دوسرے کی احادیث کی کتب کھلے دل کے ساتھ، تعصب اور عیب جوئی کی خواہش کے بغیر پڑھیں ۔ اہلسنت کی صحاح ستہ تو مشہور ہیں لیکن اہل تشیع کی کتب اربعہ ( چار کتابیں) عام طور پر اوجھل رہتی ہیں ۔ ان چار کتابوں میں بھی کئ احادیث صحیح ہونگی۔ امت کو ان سے بھی راہنمائی مل سکتی ہے۔ پہلے کتابیں تو کتابوں کے قریب لائیے۔ مذاھب اور فرقے بھی قریب آ جائیں گے۔ مشترکات یعنی توحید،قرآن، ختم نبوت اور اہلبیت پر امت کو اکٹھا … Continue reading تمام فرقے ایک دوسرے کی احادیث کی کتب سے استفادہ کریں

عالمی یومِ انہدامِ جنت البقیع – مفتی امجد عباس

نجد و حجاز میں بالخصوص مکہ اور مدینہ میں نبی کریم صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم اور اسلام کے ابتدائی دور کے بہت سے آثار اور تاریخی مقامات تھے، جنھیں “شرک” کے وسوسے کے پیش نظر مٹا دیا گیا۔ مدینہ منورہ کا تاریخی قبرستان؛ جنت البقیع جہاں خاندانِ نبوت میں سے حضرت عباس، امام حسن، امام زین العابدین، امام محمد باقر، امام جعفر صادق علیھم السلام سمیت ازواجِ نبی اور صحابہ کرام بھی مدفون ہیں، اُس قبرستان پر بھی بلڈوزر چلا کر، بعض قبور پر بنے قُبے گرا دیئے گئے اور قبور کو سطحِ زمین کے برابر کر دیا … Continue reading عالمی یومِ انہدامِ جنت البقیع – مفتی امجد عباس

آہ، جنت البقیع – آغا شورش کاشمیری

آغا شورش کاشمیری، مسلک دیوبند کے نقیب، پاکستان کے مشہور اہل قلم اور نامور صحافی تھے۔اُنہوں نے شاہ فیصل کے دور میں سعودی عرب میں 14دن گزارے اور اُن تاثرات کو اپنی مشہور کتاب “شب جائے کہ من بودم” میں تحریر کیا ہے۔ جنت البقیع کے حوالے سے شورش کاشمیری لکھتے ہیں کئی لوگ باہر زائروں کے انتظار میں رہتے اور معاوضہ طے کئے بغیر انعام کی توقع پر ساتھ ہو جاتے ہیں وہ ڈھیریوں کی نشاندہی کرتے ہیں جس سے معلوم ہوتا ہے کون سی قبر کس وجود مبارک کی ہے ؟ ۔۔۔ جنت البقیع جو خاندان رسالت کے … Continue reading آہ، جنت البقیع – آغا شورش کاشمیری

Tolerance vs Inclusion: Lesson from Neelam Ghar

Dr Jawad Syed In this brief clip from a popular TV show (Neelam Ghar, later renamed as Tariq Aziz show) in 1990s in Pakistan, the host (Tariq Aziz) in simple words explains what many people have a real difficulty in understanding, i.e., the difference between tolerance and appreciation/inclusion. The Urdu/Hindi words that Tariq Aziz uses in his explanation are bardaasht (tolerance) and pasand (liking or appreciation). He says that the essence of democracy is the appreciation (not tolerance) of differences. It’s surprising to see that several leaders and organizations in the world today still describe tolerance as one of their … Continue reading Tolerance vs Inclusion: Lesson from Neelam Ghar

Ertugrul on Ali ibn Abi Talib and Imam Hussein

“Truth belongs to Allah. And as for as Yazid sits there, even if thousands of Hussain are perished, the followers of Ali’s path will never yield” ~ #Ertugrul (Season 2) “جب تک یزید موجود ہے، خواہ ہزاروں حسین شہید ہو جائیں، علی کے ماننے والے راہ صداقت سے کبھی نہیں ہٹ سکتے” – ارطغرل غازی – سیزن دوئم Continue reading Ertugrul on Ali ibn Abi Talib and Imam Hussein